124

کورونا کا پاکستان کرکٹ پر بھی گہرا اثر پڑنے لگا

لاہور: کورونا کا پاکستان کرکٹ پر بھی گہرا اثر پڑنے لگا جب کہ نیدرلینڈزمیں اگلے 4 ماہ تک کھیلوں کے بڑے مقابلوں پر پابندی عائد کردی گئی جس کی وجہ سے گرین شرٹس کا دورہ بھی ملتوی ہوگیا۔
وائرس سے پیدا ہونے والی صورتحال میں نیدر لینڈز کی حکومت نے پرائمری اسکول اور چند ضروری شعبے کھولنے کا عندیہ تو دیا لیکن اسپورٹس ایونٹس اور میوزک فیسٹیول سمیت عوامی اجتماعات پر یکم ستمبر تک پابندی عائد کردی ہے،بغیر تماشائیوں کے بھی کھیلوں کا انعقاد کرنے کی اجازت نہیں دی گئی،اس صورتحال میں ڈچ فٹبال لیگ نے بھی اپنا رواں برس کا سیزن تمام ہونے کا اعلان کردیا ہے۔
وزیراعظم مارک روٹ نے کہاکہ ہم کسی بھی قسم کا خطرہ مول نہیں لے سکتے، اس لیے ستمبر تک تمام قسم کے آرگنائز اسپورٹس پر بھی پابندی ہوگی۔
دریں اثنا پاکستان کرکٹ بورڈ کے چیف ایگزیکٹیو وسیم خان نے سیریز ملتوی ہونے پر افسوس کا اظہار کیا ہے، انھوں نے کہا کہ موجودہ حالات میں یہ بالکل درست فیصلہ ہے کیونکہ انسانی زندگیاں کرکٹ میچ یا کسی بھی سرگرمی سے بہت زیادہ قیمتی ہیں، انھوں نے کہاکہ نیدر لینڈز کورونا وائرس سے شدید متاثرہوا اور ہم وہاں جانیں گنوانے والے افراد کیلیے تعزیت کا اظہار کرتے ہیں۔
وسیم خان نے کہاکہ پاکستان کرکٹ ٹیم نے ہمیشہ دورئہ نیدرلینڈز کا بھرپور لطف اٹھایا، جیسے ہی حالات معمول پر آئیں گے ہم اپنی ذمہ داری کا مکمل احساس کرتے ہوئے کے این سی بی کی مشاورت سے دورئہ نیدرلینڈز کے نئے شیڈول کی تیاری کاآغاز کردیں گے۔

انھوں نے کہا کہ آئرلینڈ اورانگلینڈ سے سیریز کے شیڈول برقرار اور میں اس حوالے سے اپنے ہم منصب نمائندگان سے رابطے میں ہوں، ہم کوئی بھی فیصلہ کرتے ہوئے اپنے کھلاڑیوں اور مینجمنٹ اراکین کی صحت و حفاظت پر کوئی سمجھوتہ نہیں کریں گے۔
آئرلینڈ پاکستان ٹیم کی جولائی میں 2 ٹوئنٹی 20 میچزمیں میزبانی کیلیے پْرامید ہے۔ گرین شرٹس کے دورئہ یورپ میں نیدرلینڈز سے 3 ون ڈے میچز ملتوی ہو چکے،آئرش ٹیم سے 2 ٹی 20 اور انگلینڈ سے 3 ٹیسٹ بھی یقینی نہیں۔
کرکٹ آئرلینڈ کے چیف ایگزیکٹیو وارین ڈیوٹروم کا کہنا ہے کہ جون میں نیوزی لینڈ کا دورئہ یورپ غیریقینی سے دوچار ہے، البتہ جولائی میں ڈبلن میں ہم پاکستان کی 2 ٹوئنٹی 20 میچز میں میزبانی کیلیے پْرامید ہیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں