11

میرے لیے ایوارڈ شوز کوئی معنیٰ نہیں رکھتے، نعمان اعجاز

کراچی: نامور اداکار نعمان اعجاز کا کہنا ہے کہ میں نے کبھی ایوارڈز کیلیے کام نہیں کیا اور مجھے اکثر ایوارڈ شوز میں بلیک میل کرکے لے جایا جاتا ہے۔

فلموں اور ڈراموں میں ایوارڈ شوز پاکستان سمیت ہر انڈسٹری میں متنازعہ سمجھے جاتے ہیں جس کی بنیادی وجہ ایوارڈز دینے کے لیے میرٹ کا نہ ہونا ہے۔ بالی ووڈ ہو یا لالی ووڈ، ایوارڈز تقریب کے دوران یہ دیکھا گیا کہ میریٹ پر آنے والے اداکاروں کو امتیازی سلوک کا سامنا کرنا پڑتا ہے اور ہرسال ایوارڈز مخصوص فنکاروں کو ہی دیے جاتے ہیں، ایسے میں وہ اداکار یا اداکارائیں جن کا کوئی ’گارڈ فارڈر‘ یا انڈسٹری میں زیادہ پہچان نہیں ہوتی، ایوارڈز سے محروم رہتے ہیں۔

ایک انٹریو میں پاکستان ٹی وی انڈسٹری کے معروف اداکار نعمان اعجاز سے جب ایوارڈ شوز میں شرکت سے متعلق پوچھا گیا تو ان کا کہنا تھا کہ میں کبھی بھی ایوارڈز کے لیے کام نہیں کرتا کیوں کہ میں نہیں سمجھتا ایوارڈز میرٹ پر دیے جاتے ہیں اور یہ صرف پاکستان میں نہیں بلکہ ہر انڈسٹری میں ہوتا ہے، میرے خیال میں ایوارڈز صرف مخصوص لوگوں کو دیے جاتے ہیں کہ یہ انڈسٹری میں سینئر ہے تو اس کو دے دو اب چاہے اس نے کتنا ہی برا کام کیوں نہ کیا ہو۔
اداکار نے کہا کہ میں سمجھتا ہوں کہ اس ایوارڈز کا سب سے بڑا نقصان یہ ہوتا ہے کہ جس نے واقعی میں کسی کردار کو نبھانے کے لیے محنت کی ہوتی ہے اگر اسے ایوارڈ نہیں ملتا تو اس کے اندر نفرت پیدا ہوتی ہے، بدقسمتی سے ایوارڈز دینے کے لیے کوئی سسٹم موجود نہیں ہے، پتہ نہیں کون لوگ ہیں جو یہ سب جج کرتے ہیں اور وہ جج کرنے والے کسی بھی اداکار کی کتنی پرفارمنس دیکھنے کے بعد یہ فیصلہ کرتے ہیں۔

نعمان اعجاز کا کہنا تھا کہ میں زیادہ تر ایوارڈ شوز میں نہیں جاتا لیکن بعض اوقات آپ پر دباو ہوتا ہے کبھی آپ کے ارد گرد کے لوگوں کی جانب سے تو کبھی اس چینل سے جس سے آپ وابستہ ہوتے ہیں، یا پھر کسی آرگنائزیشن کے ساتھ کام کررہے ہوتے ہو تو وہ آپ کو بلیک میل کرتا ہے اور مجھے ہمیشہ ایوارڈ شوز میں شرکت کے لیے بلیک میل کیا جاتا رہا ہے۔ میرے لیے سب سے بڑا ایوارڈ مداحوں کی خوشی ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں