240

ملک میں تعلیمی ٹیکنالوجی نے علم کا حصول آسان بنادیا

کراچی: نیو پورٹس انسٹی ٹیوٹ آف کمیونی کیشن اینڈ اکنامکس کی چیئرپرسن ہما بخاری نے کہا ہے کہ پاکستان میں آن لائن درس وتدریس کا سلسلہ آنے والے وقتوں میں بہت اہمیت کا حامل ہے، موجودہ صورت حال میں طلباء کا قیمتی تعلیمی سال بچانے کے لیے آن لائن درس وتدریس وامتحانات کا انعقاد تمام تعلیمی اداروں کے لئے نیا تجربہ ثابت ہوا ہے۔ آن لائن درس وتدریس میں یقینا دشواریاں ضرور آئیں کیونکہ اساتذہ کے لیے یہ نیا تجربہ تھا اور طلباء کے لیے بھی، اب ہمیں ان جدید ٹیکنالوجی کی افادیت کو سمجھنا ہے، اساتذہ کی تربیت کے لیے آن لائن کلاسز کا اجرا بہت ضروری ہے جس کے لیے ہمیں ایسے ٹیکنیکل اساتذہ کی ضرورت ہے جو اساتذہ کو آن لائن درس وتدریس کی آگہی دیں، انٹرنیٹ کنکشن کے ذریعے آن لائن ایجو کیشن کے حوالے سے بعض کمزور پہلو بھی سامنے آئے ہیں جن کو انٹر نیٹ پرووائڈر کمپنیز کے تعاون سے حل کر کے طلباء کے لیے آسانی پیدا کی جا سکتی ہیں،ہما بخاری نے کہا کہ آئندہ ہمیں اپنے اساتذہ کے لیے ماہر آئی ٹی کی خدمات حاصل کرنی پڑیں گی۔
کورونا بحران نے ہمیں سکھادیا ہے کہ ہمیں اب آئندہ تعلیمی اداروں کو کس انداز میں چلانا ہے اور ہمیں درس وتدریس کے لیے طلباء فہم وطلبا دوست کورسز کا اجرا کرنا ہوگا تاکہ طلباء باآسانی اپنی تعلیمی سرگرمیوں کو جاری رکھ سکیں،حکومت ماہرین تعلیم کی آن لائن کانفرنس بلائے، نیو پورٹس انسٹی ٹیوٹ کے اساتذہ نے انتہائی مہارت سے رواں سیمسٹر کو جاری رکھا بلکہ امتحانات کا انعقاد بھی ممکن بنایا، آئندہ سیمسٹر میں موجودہ تجربہ سے استفادہ کرتے ہوئے مزید بہتری لائی جائے گی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں